مہاراشٹر

ہارٹ اٹیک سے ہوئی دولہے کی موت ; شادی گھر بنا ماتم کدہ

کھام گاؤں:(واثق نوید):موت کا ایک دن مقرر ہے ، موت کہیں بھی اور کبھی بھی آسکتی ہے۔ بلڈانہ ضلع میں واقع قصبہ ڈھاڑ میں عقد کے فورآ بعد دولہے کی موت واقع ہوجانے سے شادی گھر ماتم کدہ میں تبدیل ہوگیا۔ پورے علاقے میں غم کا ماحول پیدا ہوگیا۔
ملی جانکاری کے مطابق ڈھاڑ کے ساکن تاجر امان بھائی کی دختر کا رشتہ سلوڑ تعلقہ کے قصبہ بھراڈی کے ساکن مرحوم ظفر خان کے فرزند ارجمند آصف خان طے پایا تھا۔ 15 ستمبر کی صبح بھراڈی سے بارات ڈھاڑ پہونچی۔ مدرسہ قاسم العلوم میں بحسن و خوبی نکاح عمل میں ایا۔ نکاح کے فورا بعد دولہا آصف خان کی طبعیت بگڑنے لگی۔ مقامی سطح پر ابتدائی علاج کے بعد آصف کو مزید بہتر علاج کے لیے بلڈانہ روانہ کیا گیا۔ لیکن افسوس راستے میں بھی نوخیز نوشہ آصف خان کی روح پرواز ہوگئی۔ ابتدائی معلومات کے مطابق حرکت قلب بند ہونے کی وجہ سے موت واقع ہوگئی۔ موت کی خبر دھاڑ میں پہنچی تو خوشیوں کا گھر غم کے ماتم کدہ میں تبدیل ہوگیا۔ پورا گاؤں سوگوار ہوگیا۔ غم و سوگوار ماحول میں بارات نے دلہن کے بجائے دولہے کی نعش بھراڈی لے گئے۔ بعد نماز مغرب مقامی قبرستان میں تدفین عمل میں آئی۔
خوشی کے اس ماحول میں اچانک دولہے کی موت واقع ہوجانے سے بلڈانہ ضلع اور جالنہ ضلع کے دھاڑ، و بھراڈی میں غم و الم کا ماحول ہے۔ عوام صدمے میں ہے۔ اللہ تعالیٰ مرحوم کی مغفرت فرمائے۔ متعلقین کو صبر جمیل عطا فرمائے اور بیوہ بنی دلہن کو بہترین نعیم البدل عطاء فرمائے آمین

kawishejameel

Jameel Ahmed Shaikh Chief Editor: Kawish e Jameel (Maharashtra Government Accredited Journalist) Mob: 9028282166,9028982166

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

error: Content is protected !!