مہاراشٹر

کھام گاؤں: یاد گار و تاریخی استقبالیہ و شعری نشست ; عقد کے موقع پر بدر ایجوکیش اینڈ ملٹی پرپز سوسائٹی کی سرگرمی

کھام گاؤں (واثق نوید) : کھام گاؤں شہر دبستان برار کا وہ ادبی مرکز ہے جو کیسی زمانے میں شاعروں کا مرکز و شاعری کا محور ہوا کرتا تھا۔ یہاں کے ادبی پروگرام بالخصوص مشاعرے ادبی دنیا میں یاد گار و تاریخی حثیت رکھتے تھے۔ جن میں ملک کے نامور شعرا اکرام شریک ہوا کرتے تھے۔ آج بھی اس روایت کو زندہ رکھنے کی کوشش جاری ہے تقرب بہر ملاقات کچھ تو چاہئے کہ تحت آج بھی مشاعرے یا شعری نشستوں کے لیے اہل ادب مواقع تلاش کرتے رہتے ہیں۔ ۔
ایسے ہی ایک خوشی کے موقع پر کھام گاؤں شہر میں ایک شعری نشست کا اہتمام کیا گیا تھا۔ موقع تھا معروف صحافی، ماہر تعلیم ، سماجی خدمت گار واثق نوید کے بھانجے ، ڈاکٹر مجاہد اللہ خان (اورنگ آباد) کے فرزند انجینئر مشاہد اللہ خان کے عقد سعید کا ، اس موقع پر انجمن ہائی اسکول و جونئیر کالج کے وسیع و خوبصورت ہال میں ایک شعری نشت 14 مئی بعد نماز عشاء منعقد کی گئی جس کی صدارت ناگپور سے تشریف لائے معروف شاعر ڈاکٹر ندیم الرحمن خان ندیم نے فرمائے۔ جبکہ مہمان خصوصی کی حیثیت سے انجمن مفید السلام کے صدر ڈاکٹر وقار الحق خان موجود تھے۔ نظامت کے فرائض ادیب علیمی (امراوتی) نے نہایت خوبصورت انداز میں انجام دیئے۔ شعرا میں عبدالرحمن فارض ، فضیل ارشد ، متین طالب ، حبیب تابش ، جمیل ارشد ، انیس شوق ، فاروق رضا ، موجود تھے ، اس موقع پر حال ہی میں مہاراشٹر راجیہ اردو اکیڈمی کی جانب سے خصوصی ریاستی ایوارڈ ملنے پر معروف صحافی غنی غازی اور محمد فاروق سر کا شال گلدستہ دیکر پر جوش استقبال کیا گیا۔ پروگرام کے کنوینر سید نجیب نے یہ یاد گار و تاریخی نشست بدر ایجوکیش اینڈ ملٹی پرپز سوسائٹی کے زیر اہتمام منعقد کی تھی۔ جیسے کامیاب بنانے میں عرفان اللہ خان ، آیت اللہ خان ، شعیب اللہ خان اور جواد افضل خان نے خوب محنت و جدوجہد کی۔ رات دیر گئے تک چلنے والی اس شعری نشست میں کثیر تعداد میں اہل ذوق حضرات موجود تھے۔

kawishejameel

Jameel Ahmed Shaikh Chief Editor: Kawish e Jameel (Maharashtra Government Accredited Journalist) Mob: 9028282166,9028982166

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

error: Content is protected !!