اہم خبریں

مالیگاؤں 2008بم دھماکہ معاملہ فارینسک ایکسپرٹ نے سادھوی پرگیہ سنگھ ٹھاکر کی موٹر بائیک شناخت کی

ممبئی 2/ اگست: مالیگاؤں 2008 بم دھماکہ معاملے میں آج فارینسک ایکسپرٹ نے ایل ایم ایل موٹر بائیک کے علاوہ یونیکورن موٹر بائیک اور پانچ سائیکلوں کی بھی شناخت کی جو انسدا ددہشت گرد دستہ اے ٹی ایس نے بم دھماکہ کے مقام سے ضبط کیا تھا۔ایل ایم ایل موٹر سائیکل وہی بائیک ہے جس پر بم نصب کیا گیا تھا انتہائی خراب حالت میں دیکھی گئی، دونوں پہئے نکل چکے تھے، پیٹرول کی ٹنکی بھی پھوٹ ہوئی دکھائی دی نیز سیٹ اور دیگر پارٹس بھی بم دھماکہ کی وجہ سے جھلسے ہوئے دکھائی دیئے۔
خصوصی گواہ استغاثہ جو سبکدوش فارینسک سائنس لیباریٹری کا اعلی افسر ہے کی گواہی گذشتہ ایک ہفتہ سے خصوصی این آئی اے عدالت میں چل رہی ہے۔
انسداد دہشت گرد اے ٹی ایس کا دعوی ہیکہ مالیگاؤں 2008 بم دھماکہ معاملے میں استعمال ہونے والی موٹر بائیک سادھوی پرگیہ سنگھ ٹھاکر کی تھی حالانکہ قومی تفتیشی ایجنسی NIAنے اضافی فرد جرم داخل کرتے وقت سادھوی پرگیہ سنگھ کو کلین چٹ دیا تھا لیکن بم دھماکہ متاثرین کی جانب سے کلین چٹ کی مخالفت کیئے جانے کے بعد خصوصی این آئی اے عدالت نے سادھوی پرگیہ سمیت دیگر ملزمین پر فرج جرم عائد کرکے مقدمہ کی سماعت شروع کیئے جانے کا حکم جاری کیا تھا۔
خصوصی جج کی ہدایت پر آج اے ٹی ایس کالا چوکی سے ایک ٹیمپو میں بھر کر دو موٹر سائیکلیں اور پانچ سائیکلوں کو ممبئی سیشن عدالت میں لایا گیا۔ٹیمپو کو عدالت کے احاطہ میں کھڑے کیا گیا پھر پانچویں منزلہ پر قائم خصوصی این آئی اے عدالت سے خصوصی این آئی اے جج لاہوٹی، خصوصی سرکاری وکیل اویناس رسال، ملزمین کے وکلاء جے پی مشرا، پرشانت مگو، سدیپ پاسبولا، بم دھماکہ متاثرین کی نمائندگی کرنے والے ایڈوکیٹ شاہد ندیم (جمعیۃ علما مہاراشٹر ارشد مدنی)و دیگر نیچے گئے اور پھر عدالتی کارروائی کا آغاز کیا گیا۔
فارینسک ایکسپرٹ نے پراطمنان طریقے سے ایک ایک چیز کی شناخت کی، جس وقت گواہ استغاثہ شناخت کررہے تھے خصوصی جج کارروائی نوٹ کروا رہے تھے۔ ملزمین کے وکلاء کی موجودگی میں موٹر بائیک اور سائیکلوں پر لگی سیل کھولی گئی ہے۔جس وقت یہ کارروائی انجام دی جارہی تھی عدالت کے احاطہ میں میڈیا کے نمائندوں کا ہجوم جمع ہوگیا تھا حالانکہ عدالت نے انہیں فوٹو گرافی اور ویڈیو گرافی کرنے کی اجازت نہیں دی تھی لیکن انہیں دو ر سے کارروائی نوٹ کرنے کی اجازت عدالت نے دی تھی۔ خصوصی جج نے تمام وکلاء کی موجودگی میں دونوں موٹر سائیکلوں اور پانچ سائیکلوں کا ہر زاویہ سے فوٹو نکلوایا اور کہا کہ اب عدالت میں موٹر سائیکلوں اور سائیکلوں کو پیش نہیں کیا جائے گا۔ دفاعی وکلاء جو بھی نوٹ کرنا چاہتے ہیں یا ان اشیاء کے متعلق جو بھی تفتیش کرنا چاہتے ہیں آج ہی کرلیں اور گواہ سے جرح کریں۔
اسی درمیان عدالت کی کارروائی کا اختتام عمل میں آیا جس کے بعد عدالت نے سماعت کل تک کے لیئے ملتوی کردی۔ ممبئی کی خصوصی این آئی اے عدالت ملزمین سادھوی پرگیہ سنگھ ٹھاکر، میجررمیش اپادھیائے، سمیر کلکرنی، اجئے راہیکر، کرنل پرساد پروہت، سدھاکر دھر دویدی اور سدھاکر چترویدی کے خلاف قائم مقدمہ میں گواہوں کے بیانات کا اندراج کررہی ہے، ابتک 260گواہوں کی گواہی عمل میں آچکی ہے اور عدالتی کارروائی روز بہ روز کی بنیاد پر جاری ہے ۔

kawishejameel

Jameel Ahmed Shaikh Chief Editor: Kawish e Jameel (Maharashtra Government Accredited Journalist) Mob: 9028282166,9028982166

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button
error: Content is protected !!
%d bloggers like this: