مہاراشٹر

کھام گاؤں : شہر میں ایک اور آسان و مسنون نکاح ; بغیر جہیز و کھانے کی اس شادی میں حافظ مجاہد قریشی نے پڑھایا نکاح

کھام گاؤں: (واثق نوید) : مسلم پرسنل لا بورڈ ، جماعت اسلامی اور جمعیت علمائے ہند کی آسان و مسنون نکاح کی مہم اور محنتوں کی نتائج دیکھنے میں آرہے ہیں ۔ مسلم سماج کے عام و خواص میں نکاح کو آسان بنانے اور ایک بڑی سنت پر عمل کرنے کا شعور پیدا ہورہا ہے۔
کھام گاؤں شہر میں آج ایک اور آسان و مسنون نکاح عمل میں آیا جس کی ہر کوئی سرہنا کررہا ہے۔ کھام گاؤں شہر کے ملت کالونی کے ساکن جاوید خان کی دختر کا رشتہ پیپل گاؤں راجہ کے ساکن محمد افضل کے فرزند محمد فضل سے طے پایا تھا۔ دونوں خاندان جماعت اسلامی سے منسلک ہونے کی وجہ سے دونوں خاندانوں کے سرپرستوں نے بغیر جہیز و کھانے کے انتہائی سادگی کے ساتھ شادی کرنے کا طے کیا۔ آج مورخہ 30 اکتوبر کو پیپل گاؤں راجہ سے محمد افضل اپنے چند رشتے داروں اور رفقاء کے ساتھ ظہر کے وقت سیدھے ضیاء کالونی مسجد میں پہونچے جہاں انکے استقبال کے لئے جاوید خان کے خاندان کے افراد و مقامی جماعت کے رفقاء موجود تھے۔ بعد نماز ظہر بلڈھانہ ضلع معاون ناظم جماعت اسلامی ہند مولوی حافظ مجاہد قریشی نے آسان و مسنون نکاح کی اہمیت و افادیت پر قرآن و سنت کی روشنی میں حاضرین سے خطاب کیا۔ خطاب کے بعد موصوف نے ہی نکاح پڑھایا۔ معلوم رہے کہ اس نکاح میں کیسی قسم کی خرافات ، جہیز کا لین دین ، یہاں تک کہ نوشہ کے گھر والوں نے دلہن کے گھر کھانا بھی نہیں کھایا۔ بارات بہت مختصر سی آئی تھی ۔
بعد ازاں حاضرین کی شربت سے ضیافت کی گئی۔ نکاح کے بعد حاضرین نے دولہا و دلہن کو دعاؤں سے نوازا۔ دونوں خاندانوں کو اس مثالی نکاح کے لئے مبارکباد پیش کی ۔

kawishejameel

Jameel Ahmed Shaikh Chief Editor: Kawish e Jameel (Maharashtra Government Accredited Journalist) Mob: 9028282166,9028982166

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
error: Content is protected !!