مہاراشٹر

کورونا کے پس منظر میں الگ ٹیم بنا کر سرکاری دواخانوں میں موجود اشیاء کا جائزہ لیا جائے۔۔۔۔ریاست کے وزیر سنجے بنسوڑے ؛ کورونا کے نئے ویرینٹ کے پس منظر میں محکمہ صحت کا جائزہ۔۔۔؛ وینٹی لیٹرز، آکسیجن، ادویات کے مناسب ذخیرہ کرنے کی ہدایات

لاتور: (محمد مسلم کبیر) :کچھ ریاستوں میں کورونا کے نئے قسم کے مریضوں کا پتہ چلا ہے۔اگرچہ فی الحال لاتور ضلع میں اس قسم کا کوئی مریض نہیں ہے، تاہم صحت کے نظام کو احتیاطی تدابیر کے طور پر تیار رہنا چاہیے۔ اس مقصد کے لیے، ریاست کے کھیل اور بہبود نوجوان، اور بندرگاہ امور کے وزیر سنجے بنسوڑے نے ضلع کی سطح کی ٹیم کے ذریعے ضلع کے تمام سرکاری صحت کے اداروں میں وینٹی لیٹرز، آکسیجن سلنڈر اور دیگر دستیاب آلات کا معائنہ کرنے کی ہدایات دیں۔
ملک کی کچھ ریاستوں میں کورونا کے نئے قسم، JN 1کے پھیلاؤ کے پیش نظر،ضلع میں صحت کے نظام کی تیاریوں کا جائزہ لینے کے لیے سرکاری ریسٹ ہاؤس میں منعقدہ میٹنگ میں وزیر بنسوڑے مخاطب تھے۔ضلع کلکٹر ورشا ٹھاکر-گھوگے، ضلع پریشد کے چیف ایگزیکٹیو آفیسر انمول ساگر،پولیس سپرنٹنڈنٹ سومے منڈے،لاتور سٹی میونسپل کارپوریشن کے کمشنر بابا صاحب منوہرے، ڈسٹرکٹ سرجن ڈاکٹر پردیپ ڈھےلے،ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفیسر ایچ۔وی وڈگاوے،ولاس راؤ دیشمکھ گورنمنٹ میڈیکل کالج اینڈ ہسپتال،ڈاکٹر اُدئے موہتے، میڈیکل سپرنٹنڈنٹ ڈاکٹر سچن جادھو اس موقع پر موجود تھے۔
ریاست کے کھیل اور بہبود نوجوان، اور بندرگاہ امور کے وزیر سنجے بنسوڑے نے کہا کہ اگر ضلع میں کورونا کی کوئی نئی شکل پائی جاتی ہے تو اس بات کو یقینی بنانے کا خیال رکھا جائے کہ تعلقہ سطح کے ہیلتھ انسٹی ٹیوٹ میں ضروری آلات اور ادویات کا وافر ذخیرہ موجود ہو۔ آکسیجن سلنڈر کے ساتھ آکسیجن پلانٹ کی موجودہ حالت بھی چیک کریں اور فوری طور پر ضروری کارروائی کریں۔کورونا کی اس قسم کے تعلق سے تمام، شہریوں کو سرکاری طور پر ہدایات اور معلومات فراہم کی جانی چاہئے اور انہیں اس بات سے آگاہ ہونا چاہئے کہ انہیں کس چیز کے بارے میں محتاط رہنا چاہئے۔وزیر کھیل سنجے بنسوڈے نے یہ بھی کہا کہ ضلع میں بنیادی مراکز صحت اور دیگر صحت کے اداروں کی تعمیر فوری طور پر مکمل کی جائے اور انہیں فعال بنانے کے لیے ضروری اقدامات کیے جائیں۔
ضلع کلکٹر شریمتی ٹھاکر-گھوگے نے کہا کہ کورونا کے نئے ورژن کے مطابق موصولہ ہدایات کے مطابق ضلعی سطح پر صحت کے نظام کا جائزہ لیا گیا ہے۔انہوں نے اس سلسلے میں کی گئی کارروائی کے بارے میں بھی تفصیلات سے آگاہ کیا۔
ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفیسر ڈاکٹر وڈگاوے نے کہا کہ کورونا کے نئے ورژن کے پس منظر میں ریاستی سطح سے ملنے والی ہدایات کے مطابق کارروائی کی جا رہی ہے اور ضلعی سطح پر بھی اس کا مسلسل جائزہ لیا جا رہا ہے۔اگرچہ فی الحال ضلع میں اس قسم کا کوئی مریض نہیں پایا گیا ہے لیکن علامات والے مریضوں کے کورونا ٹیسٹ کے لیے کیڑے دستیاب کرائے گئے ہیں۔انہوں نے ضلع میں دستیاب صحت کی سہولیات کے بارے میں بھی جانکاری دی۔
ڈاکٹر ولاس راؤ دیشمکھ گورنمنٹ میڈیکل کالج کے ڈاکٹر موہیتے نے کہا کہ کورونا کے نئے قسم کے علاج کے لیے 50 بستروں کو محفوظ کیا ہے اور وینٹی لیٹر اور آکسیجن سسٹم کی جانچ کے لیے ‘ماک ڈرل’ کرائی گئی ہے۔ ۔
jamsham hair oil contact for distirbutor ship 01

kawishejameel

chief editor

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

error: مواد محفوظ ہے !!

Discover more from

Subscribe now to keep reading and get access to the full archive.

Continue reading